Daily Mashriq Quetta Urdu news, Latest Videos Urdu News Pakistan updates, Urdu, blogs, weather Balochistan News, technology news, business news

کوہلو کی دکان میں دھماکا، 2 افراد جاں بحق اور 20 زخمی

0

بلوچستان کے ضلع کوہلو میں دھماکے کے نتیجے ایک شخص جاں بحق اور 20 زخمی ہوگئے۔

ڈی ایچ کیو ہسپتال کوہلو کے ایم ایس اصغر مری نے کہا کہ کوہلو دھماکے میں ہمارے پاس 21 زخمیوں کو لایا گیا جن میں سے ایک شخص جاں بحق ہوچکا ہے۔ انہوں نے کہا کہ دھماکے میں زخمی 20 افراد میں سے 10 شدید زخمیوں کو ڈیرہ غازی خان منتقل کردیا گیا ہے۔

مشیر داخلہ میر ضیا نے کوہلو میں حلوائی کی دکان میں دھماکے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے ڈپٹی کمشنر کوہلو سے واقعے کی رپورٹ طلب کرلی۔

مشیر داخلہ نے ہدایت کی کہ واقعے کا تمام پہلوؤں سے جائزہ لیا جائے اور دھماکے میں زخمی ہونے والوں کو تمام طبی سہولیات فراہم کی جائیں۔ انہوں نے دہشت گردی کو جڑ سے اکھاڑنے کا عزم ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ دہشت گردوں کو اپنے مذموم مقاصد میں کامیاب نہیں ہونے دیں گے۔

صوبائی وزیر تعلیم نصیب اللہ مری بھی ڈی ایچ کیو ہسپتال کوہلو پہنچ گئے اور ہسپتال میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی ہے۔

نصیب اللہ مری نے ڈان نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ دھماکے کے نتیجے میں 20 افراد زخمی ہوئے جن میں سے 12 کی حالت تشویش ناک ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ زخمیوں کو طبی امداد فراہم کی جارہی ہے اور اگر کسی مریض کی حالت بگڑتی ہے تو اسے ہنگامی طبی امداد کے لیے ملتان منتقل کردیا جائے گا۔

دھماکے کے بعد پولیس اور ایف سی اہلکاروں نے جائے وقوع کو گھیرے میں لے کر تفتیش شروع کردی ہے۔

دھماکا کوہلو کے گنجان آباد علاقے میں ہوا اور دھماکے کے موقع پر جائے حادثہ پر لوگوں کی بڑی تعداد موجود تھی۔

دھماکے کی نوعیت کے بارے میں فی الحال کچھ علم نہیں ہو سکا اور پولیس اور ایف سی کی ٹیمیں علاقے میں سرچ آپریشن میں مصروف ہیں۔

مردان میں نماز جمعہ سے قبل خودکش دھماکا

خیبر پختونخوا کے ضلع مردان میں ایک خودکش بمبار نے خود کو دھماکے سے اڑا لیا لیکن خوش قسمتی سے کسی قسم کا جانی نقصان نہیں ہوا۔

دہشت گردی کا یہ واقعہ چورا پولیس اسٹیشن کی حدود میں پیش آیا اور باوثوق پولیس ذرائع کے مطابق دھماکا کھلے علاقے میں ہونے کی وجہ سے کوئی جانی نقصان نہیں ہوا۔

میدان ڈویژن کے ریجنل پولیس افسر محمد علی خان نے کہا کہ یہ ایک خود کش دھماکا تھا جس میں خودکش بمبار مارا گیا لیکن دھماکے میں کوئی اور جانی نقصان نہیں ہوا۔

ایک پولیس ذرائع نے بتایا کہ ابھی یہ معلوم نہیں ہو سکا کہ خود کش بمبار نے خود کو دھماکے سے اڑایا یا پھر ایسا حادثاتی طور پر ہوا۔

ان کا کہنا تھا کہ یہ واقعہ نماز جمعہ سے قبل پیش آیا تو ہو سکتا ہے کہ خودکش بمبار اپنے ہدف کی جانب جا رہا ہو اور اسی دوران یہ دھماکا ہو گیا تاہم پولیس تفتیش کررہی ہے اور جائے حادثہ سے ثبوت اکٹھے کیے جا رہے ہیں۔

You might also like
Leave A Reply

Your email address will not be published.