Daily Mashriq Quetta Urdu news, Latest Videos Urdu News Pakistan updates, Urdu, blogs, weather Balochistan News, technology news, business news

آرمی چیف کے آخری خطاب کے بعد مایا علی ٹوئٹر پر ٹاپ ٹرینڈ

0

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کی جانب سے جی ایچ کیو میں 23 نومبر کو منعقد یوم شہدا کی تقریب سے الوداعی خطاب کے بعد ٹوئٹر پر اداکارہ مایا علی اچانک ٹاپ ٹرینڈ بن گئیں۔

قمر جاوید باجوہ چند دن بعد اپنے عہدے سے سبکدوش ہوجائیں گے اور حکومت نے لیفٹیننٹ جنرل عاصم منیر کو نیا آرمی چیف مقرر کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

جی ایچ کیو میں یوم شہدا کی تقریب کی میزبانی کے دوران مایا علی کی جانب سے کہی گئی چند باتوں کی وجہ سے وہ ٹوئٹر پر ٹاپ ٹرینڈ رہیں اور لوگوں نے ان کے دعووں پر طرح طرح کے تبصرے کیے۔

 

 

میزبانی کے دوران ایک موقع پر مایا علی نے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کی تعریف کرتے ہوئے کہا تھا کہ ’تاریخ جب قمر جاوید باجوہ کا ذکر کرے گی، تب ان کا نام دنیا کی مشکل ترین جنگ لڑنے والے سپہ سالاروں کی فہرست میں لکھا جائے گا‘۔

 

 

اداکارہ کے اسی جملے کی وجہ سے وہ ٹوئٹر پر ٹاپ ٹرینڈ بنی رہیں اور لوگوں نے ان کے بیان پر طرح طرح کی میمز شیئر کیں۔

 

 

مایا علی کے مذکورہ بیان کے وقت کیمرامین نے آرمی چیف کی جھلک بھی دکھائی تھی، جس میں انہیں خاموش دیکھا جا سکتا ہے۔

 

 

لوگوں نے اداکارہ کی مذکورہ کلپس شیئر کرتے ہوئے ان سے سوال کیا کہ آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کون سی دنیا کی مشکل ترین جنگ لڑی تھی؟

 

 

اسی طرح کئے لوگوں نے کلپ کو شیئر کرتے ہوئے لکھا کہ مایا علی کے بیان پر خود آرمی چیف بھی پریشان ہوگئے کہ انہوں نے ایسی کون سی دنیا کی خطرناک ترین جنگ لڑی تھی؟

 

 

جہاں لوگوں نے اداکارہ سے سوالات کیے کہ وہ کون سی جنگ کا ذکر کر رہی ہیں؟ وہیں کئی لوگوں نے ان کی حمایت بھی کی اور لکھا کہ انہوں نے کسی دوسرے کی جانب سے لکھا گیا اسکرپٹ پڑھا اور اپنی ذمہ داریاں نبھائیں، ان پر تنقید کرنا سمجھ بالاتر ہے۔

 

 

بعض لوگوں نے ان کی کلپس کے بعد لکھا کہ اگلی بار تمغہ امتیاز مایا علی کو ملے گا۔

 

 

لوگوں نے مایا علی کی کلپس وائرل ہونے کے بعد ان کے بیان پر میمز بھی شیئر کیں۔

 

 

کچھ لوگوں نے سمجھانے کی کوشش کی کہ مایا علی نے جو کہا وہ کسی اور کی جانب سے لکھا گیا تھا، وہ اداکارہ کے اپنے الفاظ نہیں تھے۔

 

 

You might also like
Leave A Reply

Your email address will not be published.