Daily Mashriq Quetta Urdu news, Latest Videos Urdu News Pakistan updates, Urdu, blogs, weather Balochistan News, technology news, business news

افغانستان کے ساتھ کھڑے ہیں ، عالمی برادری مدد کرے : اوآئی سی

0

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

اسلام آباد ، جدہ  :  اوآئی سی نے کہاہے کہ نازک موڑپرافغانستان کے ساتھ کھڑے ہیں،عالمی برادری انسانی بنیادپر مددکرے ۔سعودی عرب کی دعوت پر افغانستان کی صورتحال پرجدہ میں اوآئی سی کے اہم اجلاس کا اعلامیہ جاری کردیا گیا۔ اجلاس نے افغانستان کے لوگوں کے ساتھ یکجہتی کا اظہار کیا اور او آئی سی کے رکن ممالک کے افغانستان میں امن ، سلامتی ، استحکام اور ترقی لانے میں ان کی مدد کے عزم کا اعادہ کیا۔ اجلاس میں افغانستان میں انسانی صورت حال کے بگڑنے پر شدید تشویش کا اظہار کیا گیا ۔رکن ممالک ، اسلامی مالیاتی اداروں اور شراکت داروں سے مطالبہ کیاگیا کہ وہ انسانی امداد کی فراہمی کے لیے تیزی سے کام کریں جس کی فوری ضرورت ہے ۔ سیکرٹری جنرل سے مطالبہ کیا گیا کہ وہ ڈونر مالیاتی اداروں کے ساتھ مل کر افغانستان میں آئی ڈی پیز اور پڑوسی ممالک میں افغان مہاجرین کی تکالیف کو دور کرنے کے لیے ضروری مدد فراہم کریں جبکہ کابل میں او آئی سی کے مشن کی اہمیت کو اجاگر کیا گیا ۔ اجلاس نے محفوظ انخلا کو آسان بنانے میں تعاون اور اس بات پر زور دیا کہ افغانستان چھوڑنے کے خواہشمند شہریوں کو ایسا کرنے کی اجازت ہونی چاہیے ۔اجلاس میں افغان فریقوں کے درمیان جامع مذاکرات کی ضرورت پر زور دیا گیا جو اپنے ملک کے مستقبل کے لیے افغانستان کے عوام کے نمائندے ہیں۔اعلامیے کے مطابق اجلاس میں تمام فریقوں پر زور دیا گیا کہ وہ افغان عوام کے مفادات کو آگے بڑھانے کے لیے کام کریں ، تشدد ترک کریں اور فوری طور پر پورے افغان معاشرے میں سکیورٹی اور سول آرڈر بحال کریں، استحکام کے لیے افغان عوام کی خواہشات کے حصول کیلئے پائیدار امن قائم کریں ، مہذب زندگی ، ان کے حقوق کا احترام اور خوشحالی کے عمل کا حصہ بنیں ۔ اجلاس نے او آئی سی کی جانب سے امن عمل کی حمایت،جامع مفاہمت پائیدار سیاسی حل تک پہنچانے ،اہم پڑوسی ممالک اور بین الاقوامی برادری کی طرف سے اس عمل کی حمایت کو یقینی بنانے کے عز م کا اعادہ کیا۔ اعلامیے میں واضح طور پر کہا گیا کہ او آئی سی اس نازک موڑ پر افغانستان کے ساتھ کھڑی ہے ۔ اجلاس نے مستقبل کی افغان قیادت اور عالمی برادری سے مطالبہ کیا کہ اس بات کو یقینی بنایا جائے کہ افغانستان دوبارہ دہشت گردوں کے پلیٹ فارم یا پناہ گاہ کے طور پر استعمال نہ ہو اور دہشت گرد تنظیموں کو وہاں قدم جمانے کی اجازت نہ دی جائے ۔ اجلاس نے افغانیوں میں اختلافات کو پرامن طریقے سے حل کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔ افغانستان میں امن ، استحکام اور قومی مفاہمت کی حمایت کے لیے او آئی سی کا پیغام پہنچانے کیلئے اسلامی جمہوریہ افغانستان ، او آئی سی کے جنرل سیکرٹریٹ سے اعلیٰ سطحی وفد بھیجنے کا مطالبہ کیا گیا۔ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے او آئی سی کے سیکرٹری جنرل ڈاکٹر یوسف بن احمد العثمین نے کہا کہ افغانستان میں مذاکرات کی حمایت کرتے ہیں۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.