Daily Mashriq Quetta Urdu news, Latest Videos Urdu News Pakistan updates, Urdu, blogs, weather Balochistan News, technology news, business news

پاکستان میں ٹک ٹاک ایپ کے استعمال کی دوبارہ اجازت

0

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

ملکی دارالحکومت اسلام آباد میں پی ٹی اے کی طرف سے پیر انیس اکتوبر کو جاری کردہ ایک بیان میں کہا گہا کہ اس بہت مقبول چینی ایپ پر رواں ماہ کے اوائل میں پابندی کئی سماجی حلقوں کی طرف سے ان شکایات کے بعد لگائی گئی تھی کہ اس ایپ کے بہت سے صارفین اسے فحاشی اور غیر اخلاقی مواد پھیلانے کے لیے استعمال کر رہے تھے۔

پی ٹی اے نے اپنے بیان میں کہا، ”اس چینی ایپ کی انتظامیہ نے یقین دہانی کرائی ہے کہ پاکستان میں اس ایپ کے اپنی ویڈیوز کے ذریعے فحاشی پھیلانے کی بار بار کوشش کرنے والے اور غیر اخلاقی حرکات کے مرتکب صارفین کے اکاؤنٹ بند کر دیے جائیں گے اور اس ایپ کے ذریعے شیئر کیے جانے والے آن لائن مواد کو ملکی قوانین کے مطابق اعتدال پسندانہ بنایا جائے گا۔‘‘

مستقل پابندی کی وارننگ

پاکستان ٹیلی کمیونیکیشن اتھارٹی نے اپنے آج جاری کردہ بیان میں یہ تنبیہ بھی کی ہے کہ اگر ٹک ٹاک کی انتظامیہ اپنی یقین دہانی کے مطابق پاکستان میں اس ایپ کے مندرجات کو اعتدال پسندانہ اور غیر فحش بنانے میں ناکام رہی، تو اس ویڈیو شیئرنگ پلیٹ فارم کو ملک میں مستقل طور پر ممنوع قرار دے دیا جائے گا۔

ٹک ٹاک پر پابندی اظہار رائے پر پابندی ہے، نگہت داد

اس اعلان کے بعد ٹک ٹاک نے بھی ایک بیان جاری کیا، جس میں کہا گیا کہ کمپنی انتظامیہ نے وعدہ کیا ہے کہ وہ اپنے صارفین کے لیے زیادہ مؤثر ہدایات پر عمل درآمد کو یقینی بنائے گی اور اس کے صارفین کی طرف سے ویڈیو شیئرنگ مستقبل میں ملکی قوانین اور ان کے تقاضوں سے متصادم نہیں ہو گی۔ ٹک ٹاک انتظامیہ نے تاہم یہ واضح نہیں کیا کہ فحاشی اور غیر اخلاقی آن لائن مواد سے متعلق وہ کیا معیارات ہیں، جن کی پاکستان میں پاسداری کا اس چینی ادارے نے وعدہ کیا ہے۔

پاکستان میں اس ایپ پر اسی مہینے لگائی جانے والی پابندی کے حوالے سے ملکی وزیر اعظم عمران خان کے ڈیجیٹل میڈیا سے متعلقہ امورکے مشیر ارسلان خالد نے کچھ عرصہ قبل اپنی ایک ٹویٹ میں کہا تھا کہ بہت سے پاکستانی والدین کے لیے یہ بات بڑی تشویش کا باعث تھی کہ ٹک ٹاک پر شیئر کی جانے والی بہت سی ویڈیوز میں نوجوان لڑکیوں کا استحصال کیے جانے کے علاوہ ان کی ویڈیوز کو جنسی رنگ دے کر بھی پیش کیا جا رہا تھا۔

پاکستان کے زیادہ تر قدامت پسند معاشرے میں حکام کی طرف سے ماضی میں لائیو ویڈیو شیئرنگ پلیٹ فارم بیگو لائیو اور آن لائن ڈیٹنگ ایپ ٹنڈر پر بھی پابندی لگائی جا چکی ہے۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.