Daily Mashriq Quetta Urdu news, Latest Videos Urdu News Pakistan updates, Urdu, blogs, weather Balochistan News, technology news, business news

صدارتی ریفرنس: کسی جماعت کو اتحاد کرنا ہے تو کھلے عام کرے، سپریم کورٹ

0

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

سپریم کورٹ کے جج جسٹس اعجاز الاحسن نے کہا ہے کہ سینیٹ میں سیاسی جماعت کی نمائندگی صوبے میں تناسب کے مطابق ہونی چاہیے، سیاسی جماعتوں کے اتحاد سے متناسب نمائندگی پر فرق نہیں پڑتا اور اگر کسی جماعت نے اتحاد کرنا ہے تو کھلے عام کرے۔

چیف جسٹس پاکستان گلزار احمد کی سربراہی میں سپریم کورٹ کے 5 رکنی لارجر بینچ نے سینیٹ انتخابات سے متعلق صدارتی ریفرنس پر سماعت کی۔

اس 5 رکنی بینچ میں چیف جسٹس گلزار احمد کے ساتھ ساتھ جسٹس مشیر عالم، جسٹس عمر عطا بندیال، جسٹس اعجازالاحسن اور جسٹس یحییٰ آفریدی بھی شامل ہیں۔

چیف جسٹس گلزار احمد نے استفسار کیا کہ کیا الیکشن کمیشن نے ووٹرز کے لیے ہدایت نامہ جمع کرایا؟

الیکشن کمیشن کے وکیل نے کہا کہ ووٹرز کے لیے ضابطہ اخلاق جمع کروا چکے ہیں۔

پیپلز پارٹی کے رہنما رضا ربانی نے دلائل کا آغاز کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان پیپلز پارٹی کے ساتھ ذاتی حیثیت میں بھی پیش ہورہا ہوں، کوشش کروں گا اپنے دلائل مختصر رکھوں۔

رضا ربانی نے کہا کہ میں 10 نکات پر اپنے دلائل دوں گا، میرے دلائل کا آغاز جسٹس اعجاز الاحسن کے نظام رک جانے والے ریمارکس سے ہو گا۔

سماعت کے دوران چیف جسٹس گلزار احمد اور سابق چیئرمین سینیٹ رضا ربانی کے درمیان مکالمہ بھی ہوا۔

رضا ربانی نے کہا کہ عام تاثر ہے رکن پارلیمنٹ اچھا وکیل نہیں ہوتا۔

چیف جسٹس نے رضا ربانی کو مسکراتے ہوئے جواب دیا کہ ایسی بات نہیں ہے، آپ اچھے وکیل ہیں، آپ تو 1994 سے سینٹ کے ممبر ہیں۔

رضا ربانی نے کہا کہ دلائل کا آغاز سینیٹ کو تخلیق کرنے کا مقصد کیا ہے اس سے کروں گا، سینیٹ کو تخلیق کرنے کا بنیادی مقصد فیڈرل ازم ہے، قائداعظم محمد علی جناح کے چودہ نکات میں سے 14واں نکتہ فیڈرل ازم کا تھا۔

انہوں نے مزید کہا کہ سینیٹ کو قائم کرنے کا مقصد گھٹن کے ماحول کو ختم کر کے متناسب نمائندگی دینا ہے، ایسی چھوٹی سیاسی جماعتیں جن کی چار صوبائی نشستیں ہوتی ہیں انہیں بھی سینیٹ میں نمائندگی ملتی ہے، چھوٹی سیاسی جماعتوں کو وفاق میں اپنی بات کرنے کا موقع دینے کے لیے سنگل ٹرانسفر ایبل ووٹ کا تصور دیا گیا۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.