Daily Mashriq Quetta Urdu news, Latest Videos Urdu News Pakistan updates, Urdu, blogs, weather Balochistan News, technology news, business news

مبینہ اغوا: افغان سفیرکی صاحبزادی تفتیشی ٹیم کو تسلی بخش جواب نہ دے سکیں

0

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

باوثوق ذرائع کا کہنا ہے کہ مبینہ اغوا اور تشدد کے معاملے پر افغان سفیر کی صاحبزادی تفتیشی ٹیم کے سوالوں کا تسلی بخش جواب نہیں دے سکی ہیں۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ مبینہ اغوا کے معاملے پر تفتیشی ٹیم نے پاکستان میں تعینات افغان سفیر اور ان کی صاحبزادی سے ملاقات کی اور وقوعہ کے حوالے سے سوالات کئے۔

تفتیشی ذرائع کہنا ہے کہ افغان سفیر کی صاحبزادی مبینہ اغوا اور تشدد کے بارے میں کسی بھی سوال کا تسلی بخش جواب نہیں دے سکیں۔

بتایا گیا ہے کہ تفتیشی ٹیم نے متاثرہ لڑکی سے سوال کیا کہ آپ راولپنڈی کیا کرنے گئی تھیں؟ تو اس نے جواب دیا کہ مجھے نہیں پتا۔

تفتیشی ٹیم نے لڑکی سے پوچھا کہ آپ ٹیکسی ڈرائیوروں سے دوران سفر گفتگو بھی کرتی رہیں، تو اس کا جواب بھی افغان سفیر کی صاحبزادی سے کچھ نہیں دیا۔

متاثرہ لڑکی سے پوچھا گیا کہ آپ نے دامن کوہ پر انٹرنیٹ کا بھی استعمال کیا تو اس نے کہا کہ اغوا کاروں نے میرا موبائل لے لیا تھا۔ تاہم ٹیم نے کہا کہ سیف سٹی فوٹج سے نظر آ رہا ہے کہ فون آپ کے پاس ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ متاثرہ لڑکی سے لیا گیا موبائل فون ٹکنیکل تجزیے کیلئے بھیج دیا گیا ہے۔

خیال رہے کہ پاکستان میں افغان سفیر کی بیٹی کے مبینہ اغوا اور تشدد کا مقدمہ تھانہ کوہسار میں درج کر لیا گیا ہے۔

افغان سفیر کی بیٹی نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ گھر سے کچھ فاصلے پر کھڑی ٹیکسی میں سوار ہو کر شاپنگ کرنے گئی، واپسی پر ایک اور ٹیکسی میں سوار ہوئی جو کچھ دیر بعد راستے میں رک گئی اور اچانک ایک شخص آکر گاڑی میں بیٹھ گیا۔

لڑکی کے مطابق نامعلوم شخص نے ان کے ساتھ مارپیٹ شروع کر دی، تشدد سے وہ بے ہوش ہو گئیں۔ ان کا کہنا تھا کہ جب آنکھ کھلی تو گندگی کے ڈھیر پر تھی، گھر کی بجائے پارک میں چلی گئی۔ والد کے آفس کولیگ کو بلایا جو مجھے گھر لے کر گیا۔

پریس کانفرنس کے دوران اغوا سے متعلق آگاہ کرتے ہوئے وفاقی وزیر شیخ رشید نے بتایا کہ افغان سفیر کی بیٹی گھر سے پیدل نکلی، ٹیکسی سے کھڈا مارکیٹ پہنچی۔ لڑکی ایف 6 سے گھر جا سکتی تھی لیکن ایف 9 جانے کو ترجیح دی، اس کے کھڈا مارکیٹ سے راولپنڈی جانے کی تحقیقات کر رہے ہیں۔ واقعہ 16 جولائی کو ہوا، رپورٹ کل کیا گیا۔ امید ہے ایک دو روز میں ملزمان گرفتار ہو جائیں گے۔

قبل ازیں وزیراعظم عمران خان نے افغان سفیر کی بیٹی کے اغوا کا نوٹس لیتے ہوئے ملزمان کو پکڑنے کے لیے ہر ممکن اقدامات اٹھانے کی ہدایت کی تھی۔

انہوں نے حکم دیا کہ وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید، اسلام آباد پولیس اور قانون نافذ کرنے والے تمام ادارے ترجیحی بنیادوں پر معاملے کی تحقیقات کریں۔ تمام ادارے معاملے کی تحقیقات میں وفاقی پولیس کے ساتھ تعاون کریں۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.