Daily Mashriq Quetta Urdu news, Latest Videos Urdu News Pakistan updates, Urdu, blogs, weather Balochistan News, technology news, business news

افطار تاسحر کاروبار کھولنے کی اجازت دینے کی اپیل

0

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

کراچی ( بزنس رپورٹر ) کراچی کی تاجر برادری نے عید الفطر سے قبل افطار تاسحر کاروبار کھولنے کی اجازت دینے کی اپیل کی ہے ۔کراچی چیمبر کا کہنا ہے کہ اس اقدام سے دکانداروں کے کورونا وبا کو پھیلنے سے روکنے کیلئے عائد کی گئی سخت پابندیوں کے نتیجے میں ہونے والے سنگین نقصانات کو کسی حد تک کم کیا جاسکے گا۔چیئرمین بزنس مین گروپ و سابق صدر کے سی سی آئی زبیر موتی والا نے کہا کہ کراچی میں کورونا کیسز کے اعدادو شمار اتنے بھی برے نہیں لہٰذا کراچی کے دکانداروں کو کم از کم افطار سے سحری تک کاروبار کھولنے کی اجازت دینے کی گنجائش موجود ہے جسے نہ صرف چھوٹے تاجر و دکاندار سراہیں گے بلکہ کراچی والوں کی ایک بڑی تعداد اس کا خیرمقدم کرے گی جس کی بدولت وہ اپنی نامکمل عید کی شاپنگ کو مکمل کر پائیں گے ،زبیر موتی والا نے کہا کہ شہر بھر کی تمام کمرشل مارکیٹوں کی جانب سے کراچی چیمبر پرشدید دباؤ ہے جبکہ ان کمرشل مارکیٹوں کے نمائندوں نے ان 2 دنوں میں ایس او پیز پر مکمل عمل درآمد کی یقین دہانی بھی کروائی ہے ۔چیئرمین بی ایم جی نے مجموعی صورتحال اور چھوٹے تاجر و دکانداروں کی پریشانیوں کو مدنظر رکھتے ہوئے اُمید ظاہر کی کہ وقتاً فوقتاً عوام کے مؤثر طریقے سے مدد کرنے میں ہمیشہ اہم کردار ادا کرنے والی سندھ حکومت اس بار بھی دکانداروں اور چھوٹے تاجروں کو اشد ضروری ریلیف فراہم کرنے کی غرض سے عید سے قبل آخری دو روز افطار سے سحری تک کاروبار بند رکھنے کی پابندیوں میں نرمی کرے گی جس سے مختلف کاروبار کو مزید تباہی سے بچایا جا سکے گا، کووڈ کے اعداد و شمار اور پیش گوئیوں کو مدنظر رکھتے ہوئے اگر حکومت ایسا محسوس کرتی ہے کہ قیمتی جانوں کے ضائع ہونے کے امکانات نہیں تودو دن کا ریلیف دے دیا جائے ۔کراچی چیمبر کے صدر شارق وہرہ نے کہا کہ سخت پابندیوں کی وجہ سے ہر طرف بے یقینی نظر آرہی ہے اور عوام نااُمید ہو رہے ہیں لہذا سندھ حکومت کراچی والوں کو عید سے قبل آخری 2 دن ریلیف فراہم کرنے کیلئے اقدامات اُٹھائے ،دوسری جانب کراچی کے تاجر نمائندوں اور تاجر تنظیموں کے عہدیداروں نے آل سٹی تاجر اتحاد ایسوسی ایشن کے صدر شرجیل گوپلانی سے ملاقات کی اور تاجر برادری کی مشکلات کے بارے میں تفصیل سے بتایا۔شرجیل گوپلانی نے وفد کے اراکین سے کہا کہ وہ کورونا وبا کی وجہ سے پیدا ہونے والی صورت حال میں تاجر برادری کے ساتھ کھڑے ہیں،موجودہ لاک ڈاؤن کے باعث کاروبار اپنے حجم کے حساب سے نہ ہوسکا جب کہ ابھی کاروباری حضرات پچھلے لاک ڈاؤن کے مضمرات سے نہیں نکل سکے تھے ۔ عوام محدود دن اور اوقات کے باعث 30فیصد خریداری بھی نہ کرسکے اس وجہ سے نہ صرف اشیا تیار کرنے اور اسٹاک کرنے والوں کا سرمایہ ڈوب گیابلکہ چھوٹا تاجر ملازم اور مزدور طبقہ قلاش ہوگیا نہ ہی کاروبار کرسکا اور نہ ہی عید کی تیاری۔شرجیل گوپلانی نے حکومت سے دردمندانہ اپیل کرتے ہوئے کہا کہ عید تک باقی رہ جانے والے دو دنوں کیلئے کاروبارکھولنے کی اجازت دی جائے اور چھوٹے تاجر نجی و سرکاری ملازمین ان کے اہل خانہ، دیہاڑی دار مزدور روزانہ کمانے اور کھانے والے طبقہ کو بھی عید کی خوشیوں میں شامل ہونے کی اجازت دی جائے جو ان کا حق بھی ہے ۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.