Daily Mashriq Quetta Urdu news, Latest Videos Urdu News Pakistan updates, Urdu, blogs, weather Balochistan News, technology news, business news

پاکستان آرمی اور ایف سی بلوچستان کاپی ڈی ایم اے اورسول انتظامیہ کے ہمراہ سیلاب زدہ علاقوں میں امدادی سرگرمیاں جاری

0

کوئٹہ( این این آئی) پی ڈی ایم اے، پاک فوج اور ایف سی بلوچستان کے تعاون سے کوئٹہ، چمن، موسٰی خیل،ژوب،نوشکی، سبی، بولان، خضدار، نصیر آباد، جعفر آبادجھل مگسی، آواران، لسبیلہ، ڈیرہ بگٹی، صحبت پور و دیگر علاقوں میں ریسکیو اور ریلیف آپریشن کا سلسلہ جاری ہے۔پاکستان آرمی، ایف سی بلوچستان اور سول انتظامیہ کی مشترکہ کوششوں سے سیلاب زدگان کو پناہ گاہیں، خوراک، طبی دیکھ بھال، تعلیم اور دیگر بنیادی سہولیات فراہم کی جارہی ہیں۔سیلاب زدہ علاقوں میں17 ریلیف کیمپس کام کر رہے ہیں۔ سبی،جھل مگسی، ڈیرہ بگٹی کے ریلیف کیمپوں میں 450افراد کو پکا ہوا کھانا فراہم کیا گیا اس کے علاوہ مسلح افواج اور سول انتظامیہ کی جانب سے سوراب، جھل مگسی، بولان، چمن، نوشکی،اوتھل، موسٰی خیل، سبی، ڈیرہ بگٹی، صحبت پور میں 2،284 راشن کے پیکٹس سیلاب متاثرین کو فراہم کئے گئے ہیں۔ جس میں آٹا، دالیں، چاول، چینی، کوکنگ آئل، پانی، دودھ اورجوس کے کارٹن وغیرہ شامل ہیں۔ اس کے علاوہ گرم ملبوسات، مچھر دانی،جوتے،واٹر کولر،ٹینٹ اورلحاف وغیرہ بھی مستحق لوگوں میں تقسیم کئے گئے ہیں۔جھل مگسی اورصحبت پور میں سیلاب کے پانی کو ڈی واٹرنگ پمپس کے ذریعے نشیبی علاقوں سے نکالا جارہا ہیں۔سیلاب زدگان کے لیے گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران پاکستان آرمی، ایف سی بلوچستان اور پی ڈی ایم اے کی جانب سے 17فری میڈیکل کیمپس کا انعقاد کیا گیا جہاں 1،988مریضوں کو مفت طبی امداد اور ادویات فراہم کی گئی ہیں۔ پاک فوج،سول انتظامیہ، بلوچستان رورل سپورٹ پروگرام، قانون نافذ کرنے والے اداروں اور دیگر متعلقہ محکموں کے نمائندوں پر مشتمل 9 ٹیمیں لسبیلہ میں ہنگامی بنیادوں پر کام کر رہی ہیں۔ٹیمیں 50 فیصد سے زائد نقصانات کا تخمینہ لگا چکی ہیں۔ذرائع آمدورفت کی جلد بحالی کے لیے سول انتظامیہ اور پاک فوج کی جانب سے شاہراہوں اور پلوں کی مرمت کا کام بھی تیزی سے جاری ہے۔ N-10, N-40,N-70,N-85کو تمام ٹریفک کی آمدورفت جبکہ N-50,N-65 کو جزوی آمدورقت کے لیے کھول دیا گیا ہے۔ایف سی بلوچستان، پاکستان کوسٹ گارڈز اور پولیس متاثرہ علاقوں میں ٹریفک کی ہموار روانی کو یقینی بنائے ہوئے ہیں۔سیلاب کی وجہ سے کوئٹہ کو فراہم ہونیوالی بجلی کے 10 ٹرانسمیشن لائن کے کھمبے تباہ ہوئے جن میں سے 4 کی مرمت مکمل کردی گئی ہے جبکہ باقی کھمبوں پر مرمت کا کام جاری ہیں۔پی ڈی ایم اے،این ڈی ایم اے آرمی اور ایف سی صوبے میں سیلاب متاثرین کو ریلیف فراہم کرنے کے لیے ہر ممکن کوششیں کر رہی ہیں۔

You might also like
Leave A Reply

Your email address will not be published.