Daily Mashriq Quetta Urdu news, Latest Videos Urdu News Pakistan updates, Urdu, blogs, weather Balochistan News, technology news, business news

پاکستان کی پہلے ٹیسٹ میں ناکامی, ووکس اور جوز بٹلر انگلش فتح کی ضمانت بن گئے

0

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

مانچسٹر; پاکستانی ٹیم انگلینڈ کیخلاف پہلے ٹیسٹ میں سات وکٹوں سے کا شکار ہو گئی جب کرس ووکس اور جوز بٹلر انگلش فتح کی ضمانت بن گئے ،مرد میدان فاسٹ بالر 84پر ناقابل شکست رہے جبکہ وکٹ کیپر کے قیمتی 75رنزنے 139کی شراکت سے بازی پلٹ دی،یاسر شاہ کی چار وکٹیں رائیگاں چلی گئیں،اس سے قبل آخری دو وکٹیں پاکستان کا مجموعہ 169تک پہنچا سکیں،یاسر شاہ نے 33رنز کا اضافہ کیا،اسٹوارٹ براڈ کی تین وکٹیں اہم ثابت ہوئیں،میزبان ٹیم کو 277رنز کا ہدف فراہم کیا جا سکا۔اولڈ ٹریفرڈ پر پہلے ٹیسٹ کے چوتھے روز پاکستان نے اپنی دوسری نامکمل اننگز آٹھ وکٹوں پر 137رنز کے ساتھ دوبارہ شروع کی تو ٹاپ آرڈر کی ناکامی کے باوجود ٹیل اینڈرز نے آڑے ترچھے اسٹروکس سے رنز میں اضافے پر بھروسہ کیا لیکن اسٹوارٹ براڈ نے یاسر شاہ کی امیدوں پر جلد ہی پانی پھیر دیا جو پانچ چوکوں اور ایک چھکے کی مدد سے 33رنز بنا کر وکٹوں کے عقب میں کیچ دے گئے جبکہ نسیم شاہ نے جوفرا آرچر کے ہاتھوں بولڈ ہونے سے پہلے ایک چوکے پر اکتفا کیا اور اختتامی دو وکٹوں کی جانب سے 32رنز کا اضافہ گرین شرٹس کو 169رنز تک ہی پہنچا سکا ۔انگلینڈ کی جانب سے اسٹوارٹ براڈ نے تین جبکہ کرس ووکس اور بین اسٹوکس نے دو،دو وکٹیں حاصل کیں اور پاکستانی برتری کو 276رنز تک محدود رکھا۔ہدف کے تعاقب میں ہوم ٹیم ایک بار پھر اچھے آغاز سے محروم رہی جب محمد عباس نے دس رنز بنانے والے روری برنز کو ایل بی ڈبلیو کردیالیکن اس کے بعد ڈومینک سبلی اور کپتان جو روٹ کے درمیان قیمتی نصف سنچری شراکت نے انگلش ٹیم کو سہارا دے دیا جو ایک وکٹ پر 86رنز تک رسائی میں کامیاب ہو گئی۔اگرچہ محض دس رنز کے فرق سے ڈومینک سبلی 36اور جو روٹ سات چوکوں سمیت 42رنز بنا کر میدان چھوڑ گئے تو پاکستانی ٹیم یکایک کھیل میں واپس آتی محسوس ہوئی جب یاسر شاہ نے بین اسٹوکس کو 9اور شاہین آفریدی نے اولی پوپ کو سات رنز پر رخصت کر کے انگلش ٹیم کو 117رنز پر پانچ وکٹوں سے محروم کرڈالا لیکن جوز بٹلر اور کرس ووکس نے ٹی ٹائم تک اسکور مزید کسی نقصان کے بغیر 167تک پہنچا دیا اور آخری سیشن کے دوران دونوں نے روانی سے بیٹنگ کرتے ہوئے اپنی نصف سنچریاں بھی مکمل کر لیں اور 200رنز کا سنگ میل پار کرنے والی میزبان ٹیم کیلئے فتح کا راستہ آسان ہو گیاجب چھٹی وکٹ پر سنچری شراکت 123بالز پر مکمل ہو گئی۔اگرچہ یاسر شاہ اور شاداب خان کی جوڑی اپنی بہترین کوششیں کرتی رہی اور دو ہاف چانس نکلے لیکن 139رنز کی شراکت اس وقت ختم ہوئی جب یاسر شاہ کیخلاف ریورس سوئپ کھیلنے والے جوز بٹلرسات چوکوں ایک چھکے سمیت 75رنز بنا کر ایل بی ڈبلیو ہو گئے ۔اظہرعلی نے آخری امید کے طور پر نئی گیند لی جس پر یاسر شاہ نے سات رنز بنانے والے اسٹوارٹ براڈ کو ایل بی ڈبلیو کردیا مگر مرد میدان کرس ووکس نے ناقابل شکست 84رنز کی اننگز کا دسواں چوکا لگا کر انگلینڈ کو تین وکٹوں سے فتح دلادی جو ہوم ٹیم کی لگاتار تیسری کامیابی بھی ہے ۔پاکستان کی جانب سے یاسر شاہ کی چار وکٹیں کسی کام نہیں آسکیں اور پاکستانی ٹیم پہلی بار انگلینڈ میں اس وقت ناکام رہی جب اس کے اوپننگ بیٹسمین نے سنچری اسکور کی تھی۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.