Daily Mashriq Quetta Urdu news, Latest Videos Urdu News Pakistan updates, Urdu, blogs, weather Balochistan News, technology news, business news

پی ڈی ایم میں شامل تمام جماعتیں اپنے اراکین اسمبلی کے استعفے لیکرپی ڈی ایم کے سربراہ کے حوالے کریں: حافظ حسین احمد

0

Get real time updates directly on you device, subscribe now.

 

کوئٹہ( آئی این پی) جمعیت علماءاسلام پاکستان کے سینئر رہنمااور سابق سینیٹر حافظ حسین احمد نے کہا ہے کہ پی ڈی ایم میں شامل گیارہ جماعتیں، سینٹ، قومی و چاروں صوبائی اسمبلیوں کے اراکین کے استعفے لیکر پی ڈی ایم کے سربراہ مولانا فضل الرحمن کے حوالے کردیں تاکہ وقت آنے پر ان کا موثر استعمال کیا جاسکے تاکہ پی ڈی ایم کے معاہدوں میں شامل استعفوں کا جو آپشن ہے اس پر عملدرآمد کو یقینی بنایا جاسکے، استعفوں کا آخری اور موثر ہتھیار کب استعمال کرنا ہے اس کے بارے میں پی ڈی ایم کی قیادت فیصلہ کرسکتی ہے لیکن اس کے لیے ضروری ہے کہ استعفوں کا خام مال اتحاد کے سربراہ کے پاس موجودہواور اس سے معلوم ہوجائے گا کہ اتحاد میں شامل گیارہ جماعتوں میں کون سی جماعتیں کٹھ پتلی حکومت کو گھر بھیجنے کے حوالے سے سنجیدہ اور مخلص ہے۔ اپنی رہائشگاہ جامعہ مطلع العلوم میں ملکی و غیر ملکی میڈیا اور مختلف وفود سے گفتگو کرتے ہوئے حافظ حسین احمد نے مزید کہاکہ 2018ءکے انتخابات کے بعد دو ڈھائی سالوں میں معاملات کو لٹکا کر جس انداز میں ڈیل کرنے کی کوشش کی گئی وہ اب کوئی ڈھکی چھپی بات نہیں رہی ، انہوں نے کہا کہ آزادی مارچ سے پہلے 2018ءکے انتخابات کے بعد پہلی اے پی سی سے لیکر آج تک کے واقعات کو کھنگالا جائے تو یہ دلخراش صورتحال بلکل واضح ہوجاتی ہے کہ اپوزیشن کے حوالے سے کہا کچھ گیا تھا اور اس پر عملدرآمد کسی اور انداز میں کروایا گیا،انہوں نے کہا کہ آزادی مارچ کے تمام تر فیصلوں کے بعد تمام بوجھ جمعیت علماءاسلام کے اُن لاکھوں کارکنان کے اوپر ہی رہا کہ جنہوں نے پورے ملک کے کونے کونے سے نامساعد حالات اور موسمی سختیوں کے باوجود ایک تاریخ رقم کی ، انہوں نے کہا کہ اس سے پہلے میں نے پارٹی کے شوریٰ اور دیگراداروں میں اور ذاتی طور پر قیادت کے سامنے جن خدشات کا اظہار کیا تھا وہی تمام صورتحال درپیش ہوئی ہے ، انہوں نے کہا کہ اس وقت بھی جو مذاکرات ڈی جی نیب کی سہولت کاری میں سرانجام دئیے جارہے ہیں بعض عناصر مصلحتوں کی وجہ سے معلومات ہونے کے باوجود اس پر خاموش ہیں، ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہاکہ وقت بتائے گا کہ جو بات میں نے کی ہے وہ صورتحال نہ صرف پی ڈی ایم کے اتحاد بلکہ خصوصاً چھوٹی جماعتوں کے حوالے سے خدانخواستہ انتہائی نقصان دہ ثابت ہوسکتی ہے، ایک اور سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ میاں محمد نواز شریف کے پاکستان سے لندن روانگی کے بعد گیارہ مہینے تک

Leave A Reply

Your email address will not be published.