Daily Mashriq Quetta Urdu news, Latest Videos Urdu News Pakistan updates, Urdu, blogs, weather Balochistan News, technology news, business news

پاکستان ایکس سروس مین سوسائٹی سمیت دیگر تنظیمیں غیر قانونی ہیں، وزارت دفاع

0

وزارت دفاع نے سابق فوجیوں کی تنظیموں سے لاتعلقی کا اظہار کرتے ہوئے وضاحت کی ہے کہ پاکستان ایکس سروس مین سوسائٹی اور ویٹرنز آف پاکستان سمیت دیگر غیر رجسٹرڈ تنظیموں کا پاک فوج کے ساتھ کوئی تعلق نہیں ہے اور نہ انہیں کام کرنے کی اجازت دی گئی ہے۔

وضاحتی بیان میں کہا گیا ہے کہ  وزارت دفاع ایسے افراد کی انجمنوں کی سرگرمیوں کو تسلیم یا ان کی توثیق نہیں کرتی جو سابق فوجیوں کی سوسائٹیوں کے طور پر ہیں یا ہونے کا دعویٰ کرتی ہیں۔

وزارت دفاع نے اپنے تحریری بیان میں کہا ہےکہ جیسے کہ پاکستان ایکس سروس مین سوسائٹی اور ویٹرنز آف پاکستان نامی دو تنظیمیں جو خیراتی مقاصد، سیلاب زدگان کی امداد اور عوامی خدمات یا اپنے خیالات کی ترویج کے لیے فوج کی حمایت اور فنڈز کی درخواست کرتی ہیں اُن کا مسلح افواج سے کوئی تعلق نہیں ہے اور نہ ہی فوج کی جانب سے کبھی انہیں تسلیم کیا گیا ہے۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ  پاکستان کی مسلح افواج کی جانب سے ایسی نام نہاد سابق فوجیوں کی سوسائٹیاں جو پاکستان کی مسلح افواج یا اس کی اکائیوں کے ساتھ وابستگی کاغیر قانونی دعوی کرتی ہیں ایسی سوسائٹیوں کو نہ تو تسلیم کیا گیا ہے اور نہ ہی اس کی اجازت ہے۔

وزارت دفاع بیان میں کہا کہ پہلے ہی سابق فوجیوں کی سوسائٹیوں کے کام کرنے چلانے کے لیے رہنما اصولوں پر جامع پالیسی مرتب کی جاچکی ہے۔ مستقبل کی مشاورت رہنمائی کے لیے وزارت دفاع، حکومت پاکستان کے دفتر میں بھی یہی پالیسی دستیاب ہے۔

بیان کے مطابق پالیسی کے رہنما اصولوں کی تعمیل نہ کرنے والے افراد کی کوئی بھی تنظیم مجرم ہوگی، جس کے تعزیری نتائج کا سامنا کرنا پڑے گا۔

You might also like
Leave A Reply

Your email address will not be published.