عاطف اسلم اس بارکوک اسٹوڈیو میں ’حمد‘ پڑھیں گے

لاہور(شوبز رپورٹر)کوک اسٹوڈیو سیزن 12 بس ایک دن کی دوری پر ہے اور ممکن ہے کہ اس کی پہلی قسط کا آغاز ہی سب کے دلوں پر راج کرنے والے عاطف اسلم کی حمد سے ہو۔عاطف اسلم نے کوک اسٹوڈیو سیزن 8 میں مشہور صوفیانہ کلام "تاجدار حرم” پڑھا جسے سب سے زیادہ پزیرائی ملی۔ یہ کوک اسٹوڈیو پاکستان کی تاریخ کا مقبول ترین کلام بھی ہے جسے ویڈیو شیئرنگ ویب سائٹ یوٹیوب پر اب تک 10 کروڑ سے زائد بار دیکھا جاچکا ہے۔اس بار کوک اسٹوڈیو سیزن 12 میں عاطف اسلم کی آواز میں شہنشاہ قوال نصرت فتح علی خان کی مقبول حمد ’وہی خدا ہے‘ پیش کی جائے گی۔سیزن 12 میں ’وہی خدا ہے‘ حمد پیش کرنے سے متعلق عاطف اسلم کا کہنا ہے کہ میں یہ حمد اپنے پانچ سالہ بیٹے کے نام کرتا ہوں کیونکہ جب وہ بڑا ہوگا تو اس کو سنے گا، اسے خوشی ہوگی کے میرے والد نے حمد پڑھی تھی۔عاطف نے کہا کہ میں امید کرتا ہوں کہ جب وہ سنے گا کہ حمد میں کیا بیان گیا ہے تو سمجھے گا اپنے آپ کو جانچ سکے گا تاکہ وہ اپنا راستہ اور اللہ کو خود اپنے طریقے سے تلاش کرسکے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Next Post

مرید عباس قتل: نیب نے بھی اینکر مرید عباس قتل میں ملوث ملزم عاطف زمان کے فراڈ کی تفصیلات جاری

جمعرات اکتوبر 10 , 2019
Share on Facebook Tweet it Share on Google Email اسلام آباد:قومی احتساب بیورو (نیب) نے بھی اینکر مرید عباس کے قتل میں ملوث ملزم عاطف زمان کے فراڈ کی تفصیلات جاری کردیں۔ڈی جی نیب فاروق اعوان کی زیر صدرات نیب سندھ کا اجلاس ہوا جس میں نجی ٹی وی کے […]

چیف ایڈیٹر

سید ممتاز احمد

قارئین اور ناظرین کو لمحہ لمحہ باخبر رکھنے کے لئے” مشرق “ویب سائٹ اور” مشرق“ ٹی وی کااجراءکیاگیا ہے۔روزنامہ” مشرق“ کا قیام1962ءمیں عمل میں آیا تھا ۔یہ اخبار پاکستان کی جدید صحافت کے علمبردار آئین کی بالادستی ،جمہوری قدروں کے فروغ اور انسانی حقوق کے تحفظ کاعلم بلند کرنے کے عزم کے ساتھ دنیائے صحافت میں آیا تھا ۔ ”مشرق “نے جدید تقاضوں کے مطابق اپنے قارئین اور دنیا بھر میں پاکستانیوں کو باخبر رکھنے کے لئے ویب سائٹ اور ویب ٹی وی کا جناب سید ممتاز احمد شاہ چیف ایڈیٹر مشرق گروپ آف نیوزپیپرز کی نگرانی میں اجراءکیاہے ۔یہاں یہ امر قابل ذکر ہے کہ اقلیم صحافت کے درخشندہ ستارے سید ممتاز احمد کا شمار پاکستانی صحافت کے اکابرین میں ہوتا ہے۔زندگی بھر قلم وقرطاس اور پرنٹ میڈیا ہی ان کا اوڑھنا بچھونا رہا۔سید ممتاز احمد شاہ نے آج سے 50 برس قبل صحافت جیسی وادی ¿ پرخار میںقدم رکھا۔ضیائی مارشل لا کے دور میں کئی مراحل آئے جب قلم اور قرطاس سے رشتہ برقرار اور استوار رکھنا انتہائی جانگسل ہوچکا تھا لیکن وہ کٹھن اور دشوار گزار راستوں پر سے گزرتے رہے لیکن ان کے پایہ¿ استقلال میں کبھی لغزش دیکھنے سننے میں نہیں آئی۔ واضح رہے کہ سید ممتاز احمد نے ملک کے اہم ترین انگریزی اخبار ”ڈان“ ”جنگ“ ”دی نیوز“ اور روزنامہ ”مشرق“ میں اپنی گراں قدر خدمات انجام دی ہیں۔ اور ان کا مشرق کے ساتھ صحافت کا سفر جاری ہے۔