سری لنکن اوپنر پاکستانی کھانوں کے شوقین نکلے

لاہور: سری لنکا ٹیم کے اوپنر دنوشکا گوناتھلاگا بھی پاکستانی کھانوں کے شوقین نکلے، ان کا کہنا ہے کہ یہاں کے کھانے بہت مزے دار ہے جب کہ مٹن بریانی کا تو کوئی جواب ہی نہیں ہے۔دنوشکا نے اتوار کی شام قذافی اسٹیڈیم کی گیلری کا دورہ بھی کیا اور وہاں پرآویزاں تصویروں میں خاصی دلچسپی ظاہر کی، اس موقع پر پی سی بی عہدیدار کی طرف سے قذافی اسٹیڈیم کی گیلری میں موجود بانی پاکستان قائد اعظم کی تصویر کے بارے میں مہمان ٹیم کے کھلاڑی کو تفصیلی طور پر آگاہ کیا۔اس موقع پر بات چیت میں سری لنکن اوپنر نے پاکستانیوں کی مہمان نوازی اورکھانوں کی کھل کر تعریف کی، ان کا کہنا تھا پاکستانی کھانے بہت مزے دار ہیں، مٹن بریانی کا توکوئی جواب ہی نہیں ہے۔انھوں نے کہا کہ پاکستان آکر بہت زیادہ خوشی ہوئی ہے اور یہاں کے لوگوں سے ملنے والی محبت ہمیشہ یاد رہے گی، زندگی میں جب بھی موقع ملا پاکستان دوبارہ ضرور آﺅں گا۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Next Post

بینظیر انکم سپورٹ پروگرام ،ایشیائی ترقیاتی بینک نے پاکستان کیلئے 200 ملین ڈالر قرض کی منظوری دیدی

پیر اکتوبر 7 , 2019
Share on Facebook Tweet it Share on Google Email اسلام آباد(بیورورپورٹ)ایشیائی ترقیاتی بینک نے بےنظیر انکم سپورٹ پروگرام کیلئے پاکستان کو 200 ملین ڈالر قرض دینے کی منظوری دیدی،تفصیلات کے مطابق ایشیائی ترقیاتی بینک (اے ڈی بی) نے حکومت کے سماجی تحفظ کے پروگرام بینظیر انکم سپورٹ پروگرام (بی آئی […]

چیف ایڈیٹر

سید ممتاز احمد

قارئین اور ناظرین کو لمحہ لمحہ باخبر رکھنے کے لئے” مشرق “ویب سائٹ اور” مشرق“ ٹی وی کااجراءکیاگیا ہے۔روزنامہ” مشرق“ کا قیام1962ءمیں عمل میں آیا تھا ۔یہ اخبار پاکستان کی جدید صحافت کے علمبردار آئین کی بالادستی ،جمہوری قدروں کے فروغ اور انسانی حقوق کے تحفظ کاعلم بلند کرنے کے عزم کے ساتھ دنیائے صحافت میں آیا تھا ۔ ”مشرق “نے جدید تقاضوں کے مطابق اپنے قارئین اور دنیا بھر میں پاکستانیوں کو باخبر رکھنے کے لئے ویب سائٹ اور ویب ٹی وی کا جناب سید ممتاز احمد شاہ چیف ایڈیٹر مشرق گروپ آف نیوزپیپرز کی نگرانی میں اجراءکیاہے ۔یہاں یہ امر قابل ذکر ہے کہ اقلیم صحافت کے درخشندہ ستارے سید ممتاز احمد کا شمار پاکستانی صحافت کے اکابرین میں ہوتا ہے۔زندگی بھر قلم وقرطاس اور پرنٹ میڈیا ہی ان کا اوڑھنا بچھونا رہا۔سید ممتاز احمد شاہ نے آج سے 50 برس قبل صحافت جیسی وادی ¿ پرخار میںقدم رکھا۔ضیائی مارشل لا کے دور میں کئی مراحل آئے جب قلم اور قرطاس سے رشتہ برقرار اور استوار رکھنا انتہائی جانگسل ہوچکا تھا لیکن وہ کٹھن اور دشوار گزار راستوں پر سے گزرتے رہے لیکن ان کے پایہ¿ استقلال میں کبھی لغزش دیکھنے سننے میں نہیں آئی۔ واضح رہے کہ سید ممتاز احمد نے ملک کے اہم ترین انگریزی اخبار ”ڈان“ ”جنگ“ ”دی نیوز“ اور روزنامہ ”مشرق“ میں اپنی گراں قدر خدمات انجام دی ہیں۔ اور ان کا مشرق کے ساتھ صحافت کا سفر جاری ہے۔