فخرزمان، آصف اورعرفان کو ڈراپ کرنے کافیصلہ

پرتھ (مشرق نیوز)پاکستان اور آسٹریلیا کے درمیان تیسرا ٹی20 میچ کل پرتھ میں کھیلا جائے گا جہاں ابتدائی دو میچوں میں ناکامی کے بعد تیسرے میچ میں پاکستانی ٹیم میں 2 سے 3تبدیلیاں متوقع ہیں۔پاکستان اور آسٹریلیا کے درمیان پہلا ٹی20 میچ بارش کی نذر ہو گیا تھا اور باران رحمت نے پاکستان کو میچ میں یقینی شکست سے بچا لیا تھا۔دوسرے ٹی20 میچ میں آسٹریلیا نے بابر اعظم اور افتحار احمد کی شاندار نصف سنچریوں کے باوجود پاکستان کو 7 وکٹوں سے شکست دے کر سیریز میں 0-1 کی برتری حاصل کر لی تھی۔تیسرے ٹی20 میچ کے لیے دونوں ٹیمیں کینبرا سے پرتھ پہنچ چکی ہیں، جہاں قومی ٹیم نے ایک روز آرام کے بعد آج پریکٹس کی۔ابتدائی دونوں میچوں میں قومی ٹیم کی بیٹنگ لائن بری طرح جدوجہد کرتی ہوئی نظر آئی اور بابر اعظم کے سوا کوئی بھی بلے باز آسٹریلین باو¿لنگ کا سامنا نہ کر سکا۔گزشتہ کچھ میچوں سے آو¿ٹ آف فارم فخر زمان کی مستقل ناقص کارکردگی کا سلسلہ جاری ہے اور ابتدائی دونوں میچوں میں وہ بالترتیب صفر اور دو رنز پر آو¿ٹ ہوئے۔فخر زمان کی ناقص کارکردگی کا اندازہ اس بات سے لگایا جا سکتا ہے کہ تقریباً ڈیڑھ سال اور گزشتہ 12 میچوں کے دوران انہوں نے ایک بھی نصف سنچری اسکور نہیں کی۔گزشتہ 12 ٹی20 میچوں میں فخر کا سب سے زیادہ اسکور 24 رنز تھا اور وہ کم و بیش تمام ہی میچوں میں ایک ہی طریقے سے وکٹ گنوا کر پویلین لوٹے۔دوسری جانب جارح مزاج مڈل آرڈر بلے باز آصف علی بھی اپنے بلے سے بھی رنز نکلنے کا نام نہیں لے رہے اور گزشتہ سال جولائی میں ڈیبیو کرنے والے بلے باز نے اب تک انٹرنیشنل ٹی20 میں ایک بھی نصف سنچری اسکور نہیں کی۔ڈومیسٹک کرکٹ میں رنز کا ڈھیر لگانے والے آصف علی کی ابتر کارکردگی کا اندازہ اس بات سے لگایا جا سکتا ہے کہ اب تک 25 ٹی20 میچوں میں وہ صرف 331 رنز بناسکے ہیں۔اسی طرح حارث سہیل بھی ابتدائی دونوں میچوں میں کچھ کرنے میں ناکام رہے لیکن ٹیم مینجمنٹ نے انہیں ایک اور موقع دینے کا فیصلہ کیا ہے تاہم فخر زمان اور آصف علی کی اگلے میچ میں شمولیت غیریقینی ہے۔ذرائع کے مطابق تیسرے ٹی20 میچ میں پاکستانی ٹیم میں فخر زمان کی جگہ امام الحق اور آصف علی کی جگہ نوجوان خوشدل شاہ کو ڈیبیو کرائے جانے کا امکان ہے۔اسی طرح ابتدائی میچوں میں طویل القامت محمد عرفان کی خراب کارکردگی کے بعد ٹیم مینجمنٹ نے انہیں بھی تیسرے میچ سے ڈراپ کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور عرفان کی جگہ محمد حسنین کو میچ میں موقع دیا جانے کا امکان ہے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Next Post

البغدادی کی اہلیہ،بہن اور بہنوئی کو گرفتار کر لیا،اردگان

جمعرات نومبر 7 , 2019
Share on Facebook Tweet it Share on Google Email انقرہ (مشرق نیوز)ترکی نے سخت گیر جنگجو گروپ داعش کے مقتول خلیفہ ابوبکر البغدادی کی اہلیہ،بہن اور بہنوئی کو گرفتار کر لیا ،ترک صدر رجب طیب اردگان نے خود گرفتاری کی اطلاع دی ،انقرہ یونیورسٹی میں تقریر کرتے ہوئے کہاااردگان نے […]

چیف ایڈیٹر

سید ممتاز احمد

قارئین اور ناظرین کو لمحہ لمحہ باخبر رکھنے کے لئے” مشرق “ویب سائٹ اور” مشرق“ ٹی وی کااجراءکیاگیا ہے۔روزنامہ” مشرق“ کا قیام1962ءمیں عمل میں آیا تھا ۔یہ اخبار پاکستان کی جدید صحافت کے علمبردار آئین کی بالادستی ،جمہوری قدروں کے فروغ اور انسانی حقوق کے تحفظ کاعلم بلند کرنے کے عزم کے ساتھ دنیائے صحافت میں آیا تھا ۔ ”مشرق “نے جدید تقاضوں کے مطابق اپنے قارئین اور دنیا بھر میں پاکستانیوں کو باخبر رکھنے کے لئے ویب سائٹ اور ویب ٹی وی کا جناب سید ممتاز احمد شاہ چیف ایڈیٹر مشرق گروپ آف نیوزپیپرز کی نگرانی میں اجراءکیاہے ۔یہاں یہ امر قابل ذکر ہے کہ اقلیم صحافت کے درخشندہ ستارے سید ممتاز احمد کا شمار پاکستانی صحافت کے اکابرین میں ہوتا ہے۔زندگی بھر قلم وقرطاس اور پرنٹ میڈیا ہی ان کا اوڑھنا بچھونا رہا۔سید ممتاز احمد شاہ نے آج سے 50 برس قبل صحافت جیسی وادی ¿ پرخار میںقدم رکھا۔ضیائی مارشل لا کے دور میں کئی مراحل آئے جب قلم اور قرطاس سے رشتہ برقرار اور استوار رکھنا انتہائی جانگسل ہوچکا تھا لیکن وہ کٹھن اور دشوار گزار راستوں پر سے گزرتے رہے لیکن ان کے پایہ¿ استقلال میں کبھی لغزش دیکھنے سننے میں نہیں آئی۔ واضح رہے کہ سید ممتاز احمد نے ملک کے اہم ترین انگریزی اخبار ”ڈان“ ”جنگ“ ”دی نیوز“ اور روزنامہ ”مشرق“ میں اپنی گراں قدر خدمات انجام دی ہیں۔ اور ان کا مشرق کے ساتھ صحافت کا سفر جاری ہے۔