تعلیمی اداروں میں سٹوڈنٹ یونینز کی بحالی کیلئے شہر شہر احتجاجی مظاہرے

0

 تعلیمی اداروں میں طلبہ یونین کی بحالی کے لیے ملک کے مختلف شہروں میں احتجاج کیا گیا ہے۔ وفاقی وزیر فواد چودھری اور بلاول بھٹو نے بھی سٹوڈنٹس یونین کی بحالی کی حمایت کر دی۔

تفصیل کے مطابق تعلیمی اداروں میں سٹوڈنٹ یونینز کی بحالی کے لیے شہر شہر احتجاجی مظاہرے ہوئے جن میں سول سوسائٹی اور دیگر تنظیمیں بھی شریک ہوئیں۔

وفاقی دارالحکومت اسلام آباد سمیت ملک کے دیگر شہروں میں طلبہ کا احتجاج جاری ہے۔ اسلام آباد میں طلبہ یونین کی بحالی کے لیے احتجاج میں مقررین نے فیسوں میں کمی کا بھی مطالبہ کیا۔

لاہور میں بھی طلبہ سڑکوں پر نکل آئے، انہوں نے ناصر باغ سے پنجاب اسمبلی تک ریلی نکالی۔ اس احتجاج میں سیاسی جماعتوں کے نمائندے، وکلا اور سوشل ایکٹوسٹ سمیت خواجہ سراؤں نے بھی شرکت کی۔

احتجاج میں جامعات کے فنڈز سے کٹوتی ختم کرنے، جنسی ہراسگی روکنے کے لیے کمیٹی تشکیل دینے کا مطالبہ بھی کیا گیا۔

ادھر پشاور میں بھی طلبہ ایکشن میں نظر آئے۔ کالجز اور یونیورسٹیوں کے طلبہ نے یونینز کی بحالی کے لیے احتجاج کیا۔ شرکا نے تعلیمی اداروں کی نجکاری پر شدید نعرہ بازی بھی کی۔

حیدر آباد میں طلبہ یکجہتی مارچ میں پریس کلب تک جلوس نکالا گیا۔ میرپور خاص میں بھی سٹوڈنٹس یونین کی بحالی کے لیے طلبہ نے احتجاج کیا جس میں سیاسی، سماجی اور سول سوسائٹی کے نمائندے بھی شامل تھے۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.